چیچہ وطنی: لاہور ہائی کورٹ ملتان بنچ میں اپیل خارج ہونے پر 3 ایس ایچ اوز ، پولیس اہلکاروں سمیت 11 افراد کے خلاف دفعہ302 کے تحت مقدمہ درج

چیچہ وطنی: لاہور ہائی کورٹ ملتان بنچ میں اپیل خارج ہونے پر 3 ایس ایچ اوز ، پولیس اہلکاروں سمیت 11 افراد کے خلاف دفعہ302 کے تحت درج مقدمہ نمبر 56/16 کا کراس ورشن درج کر لیا گیا۔ پولیس ابھی تک کوئی پیٹی بھائی گرفتار کرنے میں کامیاب نہ ہو سکی۔

تفصیلات کے مطابق2016 میں تھانہ شاہکوٹ میں تعینات ایس ایچ او محمد زمان رشید وٹو نے ایس ایچ او کسووال آفتاب صابر، ایس ایچ او تھانہ صدر سجاد حیدر ڈوگر، اے ایس آئی منیر احمد،اے ایس آئی ریاض احمد نے مبینہ طور پر نواحی گاؤں 22چودہ ایل کے رہائشی بااثر زمینداروں وریام، نذر، رب نواز اور عنصر کے ساتھ ساز باز ہو کر اسی گاؤں کے رہائشی شہزاد، حسنین اور ایک نامعلوم شخص کو پولیس مقابلے میں ہلاک کر دیا گیا۔

ورثاء کی طرف سے رٹ پٹیشن زیر دفعہ 22اے،22بی بعدالت جج ملک نور خان ایڈیشنل سیشن جج چیچہ وطنی دائر کی تھی جو مورخہ 8 جون 2016 کو منظور کر کے ملزمان کے خلاف سیکنڈ ایف آئی آر درج کرنے کا حکم دیا تھا۔

متعلقہ پولیس اھلکاروں نے ھائی کورٹ ملتان بینچ میں ورثاء کی رٹ کو چیلنج کیا تھا جو خارج ہو گئی۔اور پولیس تھانہ شاہکوٹ نے مذکورہ بالا تین ایس ایچ اوز سمیت 11 پولیس اہلکاروں پر دفعہ302 کے تحت کراس ورشن درج کر لیا ہے


یہ امر بھی قابل ذکر ہے ان مقتولین کے ورثاء نے 2 سال کے دوران اس جعلی پولیس مقابلے کے خلاف کئی مرتبہ احتجاج بھی کیاتھا ۔

سماجی تنظیموں نے مورائے عدالت قتل کئے گئے 3 افراد کے اعلی سطحی اور غیرجانبدارانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے تاکہ انصاف کے تقاضے پورے کئے جا سکیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*